0

نمازِ کے دوران مسجد پر حملہ، امام سمیت18نمازی شہید افسوس ناک خبرآگئی

ابوجا(ویب ڈیسک)نائیجیریا میں م س

لا ح افراد نے ایک مسجد کے اندر گھس کر اندھا دھند گولیاں بر سا دیں جس کے نتیجے میں 18 نمازی شہید ہوگئے۔عالمی میڈیا کے مطابق یہ واقعہ اس وقت پیش آیا کہ جب نمازی نماز فجر میں مشغول تھے اس دوران مسجد میں فائرنگ سے پیش امام سمیت 18 نمازی شہید اور 4 زخمی ہوگئے۔

حملہ آوروں کا تعلق اقلیتی شدت پسند گرپ فولانی سے بتایا جاتا ہے جو اس سے قبل بھی گاؤں پر حملوں اور لوٹ مار میں ملوث رہے ہیں۔نائیجر پولیس کا کہنا ہے کہ اقلیتی مسلم گروپ فولانی کے شدت پسندوں اور مقامی دیہاتوں کے درمیان کافی عرصے سے تنازع چلا آرہا تھا اور یہ واقعہ اسی تنازعے کا شاخسانہ ہے

۔قانون نافذ کرنے والے اداروں نے مشترکہ سرچ آپریشن کا آغاز کردیا ہے تاہم کوئی گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی ہےنائیجیریا کی فولانی نسل اقلیتی مسلم گروپ ہے جو زیادہ تر خانہ بدوشوں پر مشتمل ہیں اور کچھ عرصے سے اس گروپ کے شدت پسند جنگجو دہشت گردی کی کارروائیوں میں ملوث رہے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں