0

گورنمنٹ گرلز ڈگری کالج وانا، جنوبی وزیرستان میں لڑکیوں کی تعلیم کیلئے ایک اورسہولت فراہم کر دی گئی

ایف سی نے شمالی وزیرستان کے علاقے وانا میں غیر ریاستی کاروائیوں میں متاثر ہونے والی کالج بلڈنگ کو از سر نو تعمیر کرنےوا wے بعد مقامی انتظامیہ کے حولے کر دیا ہے جہاں علاقے کی لڑکیوں کیلئے ایف اے ، ایف یس سی کی تین کلاسیں جبکہ بی اے کی ایک کلاس لی جا سکے گی۔واضح رہے یہ تعلیمی عمارت حملوں میں مکمل طور پر تباہ کر دی گئی تھی تاکہ علاقے کی بچیوں کو تعلیم سے دور رکھا جا سکے۔ دیگر کئی املاک کی طرح ایف سی نے رواں سال کے اوائل میں اس بلڈنگ کی ازسر نو بحالی کا بیڑ ہ اٹھایا اوراب یہاں تعلیمی سلسلہ باقاعدہ شروع ہو چکا ہے۔

گزشتہ روز وانا میں منعقدہ ایک سادہ مگر پر وقار تقریب میں آئی جی ایف سی ساؤتھ نے گورنمنٹ ڈگری کالج ، واناکی بلڈنگ کا باضابطہ افتتاح کیا جس کے بعد اسے کمشنر ڈیرہ اسماعیل خان ڈویژن کے سپرد کر دیا جو اس کے انتظامی امور چلائیں گے۔ اس موقع پر ڈائریکٹر ہائر ایجوکیشن، ڈی سی ساؤتھ وزیرستان ڈویژن، کالج انتظامیہ اور علاقہ ملک و مشران نے شرکت کی۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے آئی جی ایف سی ساؤتھ نے کہا کہ ہمارے مذہب نے تعلیم ہر مرد و عورت پر فرض کی ہے اور کوئی بھی معاشرہ اس وقت تک ترقی نہیں کر سکتا جب تک کہ وہ اپنی بچیوں کو تعلیم کے زیور سے آراستہ نہ کرے ۔ مجھے خوشی ہے کہ میں اس علاقے کی بچیوں کیلئے آگے بڑھنے کی نئی راہ کھولنے کا باعث بنا ہوں۔

اس موقع پر کمشنر ڈی آئی خان ڈویژن نے آئی جی ایف سی ساؤتھ کا کالج کی از سر نو تعمیر پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ علاقے کے متاثرہ طبقے کی بحالی کی جانب یہ ایک بڑا قدم ہے جس سے علاقے میں خوشحالی کے نئے دور کا آغاز ہو گا۔ یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ اس کالج کیلئے ایک خاتون ماہر تعلیم کی خدمات بطور پرنسپل حاصل کی گئی ہیں جبکہ دس خواتین اساتذہ درس و تدریس کی ذمہ داریاں انجام دیں گی۔بلڈنگ کے اندر 16کلاس رومز جبکہ 4لیب بشمول جدید سہولیات سے آراستہ کمپیوٹر لیب بھی بنائی گئی ہے۔ ایک
ا متحانی ہال اور ایک کثیر المقاصد ہال بھی تعمیر کیا گیا ہے جہاں لڑکیوں کیلئے غیر نصابی سرگرمیوں کو فروغ دیا جائے گا۔وسیع و عریض کھیل کا میدان لڑکیوں کوکھیلوں کی سہولت فراہم کرے گا۔اس کے علاوہ زیر تعلیم لڑکیاں مکمل طور پر محفوظ ہوسٹل کی سہولت سے بھی استفادہ کر سکیں گی۔علاقے کے ملک اور مشران نے بھی ایف سی کے اس اقدام کو سراہا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں