0

ای سی سی اجلاس: متعدد اہم فیصلہ کرلئے گئے گندم کی کم سے کم امدادی قیمت کتنی مقرر کی گئی ہے جان کرکسان جھوم اٹھی

اسلام آباد:(ویب ڈیسک):کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی ) نے سال 2020-21 کیلئے کابینہ کے سامنے گندم کی کم سے کم امدادی قیمت 1600 روپے فی من مقررکرنے کی تجویز پیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔
اقتصادی رابطہ کمیٹی کااجلاس کابینہ ڈویژن میں وزیراعظم کے مشیربرائے خزانہ ومحصولات ڈاکٹرعبدالحفیظ شیخ کی زیرصدارت منعقد ہوا۔ اجلاس میں سال 2020-21 کیلئے کابینہ کے سامنے گندم کی کم سے کم امدادی قیمت 1600 روپے فی من امدادی قیمت کی تجویز پیش کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔اجلاس کوبتایا گیاکہ امدادی قیمت کاطریقہ کارگندم کی پیداوارمیں اضافہ ، مارکیٹ کے استحکام اورکسانوں کے منافع بڑھانے میں کلیدی کرداراداکرتاہے۔2010-11 سے لیکراب تک گندم کی امدادی قیمت پرچاربارنظرثانی کی جاچکی ہے۔

اجلاس کوبتایاگیا کہ ای سی سی نے گندم کی امدادی قیمت کے تعین کے حوالہ سے جو فیصلہ کیاہے وہ قیمت گندم کے سب سے بڑے پیداواری صوبہ پنجاب کی طرف سے سفارش کردہ قیمت کے قریب ہے۔اقتصادی رابطہ کمیٹی کو ٹریڈنگ کارپوریشن آف پاکستان (ٹی سی پی) کے زریعہ گندم کی درآمد کی صورتحال سے آگاہ کیاگیا۔ای سی سی کوبتایا گیا کہ جنوری 2021 تک ٹی سی پی بین الاقوامی بولی کے ذریعہ 10 لاکھ میٹرک ٹن گندم درآمدکرے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں