0

جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کے خلاف صدارتی ریفرنس کا اصل مجرم کون ہے مریم نوازنے قوم کو حقیقیت بتا دی

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)سابق وزیراعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز نے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کے خلاف صدارتی ریفرنس مسترد ہونے کے بعد رد عمل دیتے ہوئے کہا کہآج کے فیصلے نے ایک صاحب کردار جج پر حملہ اور عدلیہ کی آزادی پر گھناؤنے وار کو روکا ہے۔مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر انہوں نے کہا کہ آج کے فیصلے نے ایک صاحب کردار جج پر حملہ اور عدلیہ کی آزادی پر گھناؤنے وار کو روکا ہے۔ آگے بڑھئیے اور جسٹس شوکت عزیز صدیقی کو بھی انصاف دیجیے، جنہوں نے غیر قانونی و غیر آئینی احکامات ماننے سے انکار کر دیا اور اس کی سزا بھگت رہے ہیں۔ان کاکہنا تھا کہ جسٹس شوکت صدیقی نے انصاف کی خاطر ایک جابر اہلکار کی دھمکی نظر انداز کر دی۔ آزاد عدلیہ اور اس پر عوامی اعتماد سے ہی پاکستان آگے بڑھ سکتا ہے۔مریم نواز نے مزید کا کہ سپریم کورٹ کے ایک دیانت دار اور شفاف کردار کے حامل جج جسٹس قاضی فائز عیسی کے خلاف سازش کرنے کے جرم میں عمران خان اور اس کے شریکِ جرم افراد کو کیفر کردار تک پہنچانا ضروری ہے۔ صدر اور انکے آفس کو صرف استعمال کیا گیا۔ مجرم عمران خان اور اسکے ساتھی ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں