33

پاکستان نے افغان الزامات مسترد کردیئے

اسلام آباد (ویب ڈیسک)پاکستان نے افغانستان میں ٹی ٹی پی کی سرگرمیوں کے بارے میں افغان وزارت خارجہ کے بیان کو مسترد کردیا ہے۔ ترجمان دفتر خارجہ زاہد حفیظ چوہدری نے کہا ہے کہ افغانستان کی طرف سے دعوے اقوام متحدہ کی رپورٹس اور زمینی حقائق کے خلاف ہے۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق پچھلے کئی سالوں میں ٹی ٹی پی نے پاکستان کے اندر متعدد دہشت گردی کے حملے کیے ہیں

ٹی ٹی پی نے پاکستان میں دہشتگردی کے لیے افغان سرزمین کو استعمال کیا۔ جون 2021 میں اقوام متحدہ کی مانیٹرنگ ٹیم کی 12 ویں رپورٹ میں ٹی ٹی پی کے پاکستان مخالف مخصوص مقاصد کو تسلیم کیا ہے،پاکستان کے خلاف سرحد پار حملوں سے ہماری سلامتی اور استحکام کو مستقل خطرہ لاحق ہے۔دفتر خارجہ کے ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان کا بلا امتیاز دہشت گردی کے خلاف ہر طرح کا مقابلہ کرنے کا عزم غیر متزلزل اور واضح ہے۔ پاکستان نے امن و یکجہتی کے لئے افغانستان پاکستان ایکشن پلان کے موثر استعمال کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ پاکستان انٹرا افغان امن عمل کو آسان بنانے کے لئے مخلصانہ کوششیں کر رہا ہے۔ ہم امید کرتے ہیں کہ افغانستان میں دیرپا امن و استحکام کے حصول کے لیے افغان اس موقع سے فائدہ اٹھائیں گے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں